1. السلام علیکم
    آئی ٹی استاد ڈاٹ کام وزٹ کرنے کا شکریہ۔ ہم آپکو خوش آمدید کہتے ہیں۔ فورم کے کسی بھی حصے کو استعمال میں لانے جیسے پوسٹنگ کرنے، کوئی تھریڈ دیکھنے یا لکھنے کسی بھی ممبر سے رابطہ کرنے کے لئے اور فورم کے دیگر آلات وغیرہ کا استعمال کرنے کے لئے آپکا رجسٹر ہونا ضروری ہے۔ رجسٹر ہونے کے لئے یہاں کلک کریں۔ رجسٹریشن حاصل کرنا بالکل آسان اور بالکل مفت ہے۔

شبِ معراج

Discussion in 'Islamic Events-ITU' started by PakArt, May 16, 2015.

Share This Page

  1. PakArt
    Offline

    PakArt May Allah bless all Martyre of Pakistan
    • 83/98

    16 May Shab e-Meraj

    اہل ایمان کو معراج النبی ﷺ مبارک
    [​IMG]

    [​IMG]
    [​IMG]
    آقا کریم صلی اللہ علیہ وسلم کے عرش معلی پر بلائے جانے اوراللہ کریم کے حسن مطلق کے جلووں کا بےحجاب دیدا کرنے والی رات شبِ معراجت النبی ﷺمبارک ہو

    اللھم صل علی سیدنا ومولانا محمد وعلی آلہ وصحبہ وبارک وسلم

    اللہ کریم ہمیں اپنے نبی اکرمﷺ کی محبت و تعظیم اور انکی تعلیمات پر عمل کی توفیق عطا فرمائے۔ آمین

    پھرآگئی اے مومنو سُن لو شبِ معراج
    پھرآگئی اے مومنو سُن لو شبِ معراج
    اللہ نے دِکھلائی ہے تم کو شبِ معراج

    سرکار ملے جاکے ہیں اِس شب کو خدا سے
    اِس واسطے کہتے ہیں سب اِس کو شبِ معراج

    اُمت کو نمازوں کا ملا تحفہ ہے اِس میں
    ہرگز نہ تم اے مومِنو بھولو شبِ معرا

    رب نے تھا دیا حکم یہ جبرائیل ِ امیں کو
    جاؤ میرے محبوب کو لاؤ شبِ معراج

    قرآن میں خود رب نے کیا ذکر ہے اِس کا
    اِس درجہ پسند آئی ہے رب کو شبِ معراج

    حیراں تھے سب دیکھ کے یہ جن و ملک بھی
    انسان کو اور قربِ خدا ہو شبِ معراج

    کافر ہے حقیقت میں مسلمان نہیں وہ
    بہائی نہیں اِک لمحہ بھی جس کو شبِ معراج

    اے مومِنو پھر ہم کو مقدر سے ملی ہے
    خوش ہو کے سب ہی آج مناؤ شبِ معراج

    محبوب ومحب کا ہوا اِس شب میں ہے سنگم
    بے مثل ہے اعظم یہی کہہ دو شبِ معراج

    اعظم یہ ہر ایک راز سے افضل بخدا ہے
    مقبولِ خدا وند ہے سمجھو شبِ معراج

    وہ (ذات) پاک ہے جو ایک رات اپنے بندے کو مسجدالحرام یعنی (خانہٴ کعبہ) سے مسجد اقصیٰ (یعنی بیت المقدس) تک جس کے گردا گرد ہم نے برکتیں رکھی ہیں لے گیا تاکہ ہم اسے اپنی (قدرت کی) نشانیاں دکھائیں۔ بےشک وہ سننے والا (اور) دیکھنے والا ہے ۔
    جناب رسالت مآب صلی اللہ علیہ وسلم کا رات کے وقت مسجد ِ حرام سے مسجد ِ اقصیٰ تک براق کا سفر ”اسراء“ کہلاتا ہے. مسجد ِ اقصیٰ سے آسمانوں کی طرف سدرة المنتہیٰ تک کا عروج فرمانا معراج شریف کہلاتا ہے۔

    شبِ معراج النبی صلی اللہ علیہ وسلم کو اللہ تعالی نے اپنے محبوب اور ہمارے آقا سیدنا محمد مصطفی صلی اللہ علیہ وسلم کو اپنے پاس عرش پر بلا "فکان قاب قوسین او ادنیٰ " کی رفعتوں پر سرفراز فرماتے ہوئے اپنا بےحجاب دیدار عطا کیا۔ امت محمدی صلی اللہ علیہ وسلم کو نماز اور مغفرت کے تحائف عطا کیےاور اپنے محبوب نبی صلی اللہ علیہ وسلم کا مرتبہ کل کائنات میں بلند کردیا۔

    چار سُو نُور کی برسات ہوئی آج کی رات
    احد اور احمد ﷺ کی ملاقات ہوئی آج کی رات
    گفتگو ذات سے بالذّات ہوئی آج کی رات
    مختصر یہ کہ بڑی بات ہوئی آج کی رات
    راکبِ وقت نے کھینچی ہے زمامِ گردِش
    حیرتِ ارض و سماوات ہوئی آج کی رات
    یوں تو الطاف تھے سرکارﷺ پہ روزِ کن سے
    وا مگر چشمِ عنایات ہوئی آج کی رات
    رِفعتِ عبد کو جبریلِ ؑ امیں نے دیکھا
    کیوں نہ ہو ‘رافعِ درجات ہوئی آج کی رات
    پردئہ میم کے اندر ہے مقامِ محمود
    کاشفِ سِرِّ حجابات ہوئی آج کی رات
    قابَ قوسَین سے دو گام ورا جا نکلا
    عقل والوں کو بڑی مات ہوئی آج کی رات
    جُملہ ایّام سے تابندہ ہے میلاد کا دن
    جُملہ راتوں سے حسیں رات ہوئی آج کی رات
    آج کی رات ہے عبادات کا ثمرہ واصفؔ
    حمد و تسبیح و مناجات ہوئی آج کی رات
    واقعہ معراج انسانوں کےلئے آزمائش تھی ۔ وماجعلنا الرءیا التی اریناک الافتنۃ للناس۔آپ ﷺ کو یہ مشاہدہ لوگوں کی آزمائش کےلئے کرایا گیا ۔یہ آپ ﷺکے ماننے والوں کا امتحان تھا ۔ اور اہل ایمان کی صفوں سے ان کالی بھیڑوں کو نکالنا مقصود تھا جو ذاتی مفاد کی خاطر اہل ایمان کی صفوں میں شامل ہورہے تھے ۔ یہی وہ معراج ہے جس کے انکار نے ابو الحکم کو” ابو جہل “بنا دیا اور جس کی تصدیق نے ابو بکر کو ” صدیق اکبر“ بنادیا

    زبانِ حال ہے شاہد، زبانِ قال گواه
    کلامِ پاک خدا، بات، بات آپ کی ہے

    عروج آ پ سےتها گو تمام راتوں کا
    حقيقتاً شبِ معراج، رات آپ کی ہے

    اسی لیے ہے لقبِ پاک، سرورِ کونين
    یہ عرش وفرش یہ کُل کائنات آپ کی ہے​

    آج کے اس ترقی یا فتہ دور میں جبکہ انسان ستاروں پر کمندیں ڈال رہا ہے اور زہر ہ ومریخ اور شمس وقمر کے فاصلوں کو سمیٹا جا رہا ہے ، معراج مصطفےﷺ کا منکر اپنے دامن میں ڈھٹائی اور تنگ نظری کے سوا کچھ نہیں رکھتا ۔ میزائل وکمپیوٹر کے دور میں معراج کا انکار ، اونٹو ں اور پتھروں کے زمانہ کے انسان کی اندھی تقلید کی بدترین مثال ہے ۔ معراج مصطفے ﷺ نے انسانیت کو تسخیر کائنات کا سبق دیا
    سبق ملا ہے یہ معراج مصطفے سے مجھے
    کہ عالم بشریت کی زد میں ہے گردوں

    ہم آج اس رہبر انسانیت کو سلام کرتے ہیں جس نے انسان کو یہ سبق دیا کہ تجھ پر شمس وقمر اور نجوم وسماءکی حکمرانی نہیں ہے بلکہ سارا نظام فلکی تیرے لئے غبار راہ ہے
    شب معراج ہمیں یہ پیغام دیتی ہے کہ انسانیت کی فلاح وکامرانی اور ” تسخیرکائنات “ کا راز پیغمبر اسلام ﷺ کی غلامی اور آپکی اطاعت میں پوشیدہ ہے

    تیری معراج کہ تو لوح وقلم تک پہنچا
    میری معراج کہ میں تیرے قدم تک پہنچا

    چھو لے نہ بندگی کہیں دامن خدائی کا
    معراج ارتقائے بشر دیکھا ہوں میں

    شب برات ،رحمتوں کی رات اسلامی قمری مہینے کی تقویم کےآٹھویں مہینے کو پندرھو یں شعبان کے روز منائی جاتی ہے۔ یہ بہت برکتوں کی رات ہوتی ہے۔ اس رات کو اپنے گھروں میں چراغاں کیا جاتا ہے۔ مسلمان اپنے گھروں اور مسجدوں کو روشن کرتے ہیں شب برات ہمارے علاقے میں بہت جوش وخروش سے منائی جاتی ہے۔ ہمارے علاقے میں ہر گھر روشن ہوتا ہے۔ اور مسجدوں کو بھی روشن کیا جاتا ہے۔بڑے اور بوڑھے شام کو ہی مسجدوں جا کر نماز ادا کرتے ہیں ۔اورساری رات نفل ادا کرتے ہیں اس رات جو بھی دعا سچے دل سے نکلی ہو اللہ تعالی اس کو فورا قبول کر لیتا ہے۔
    اس رات کو ہر کوئی اللہ کی بارگاہ میں دعا کے لیے ہاتھ اٹھاتا ہے۔ اس رات چونکہ ہماری زندگی اور موت کا فیصلہ ہونا ہوتا ہے۔ تو تمام لوگ ساری رات اپنے گناہوں کی معافی مانگتے ہیں ۔
    یہ رات خدا کی طرف سے ایک تحفہ ہے۔ جس کو مسلمان سچے دل سے قبول کرتے ہیں ۔ شب برات شعبان المعظم کی چودہ تاریخ کو ہوتی ہے۔ اصل میں شعبان المعظم کی پند ھویں رات کو شب برات کہا جاتا ہے۔ برات کا مطلب نجات کی رات ہے۔ اس رات کی خصوصیت یہ ہے کہ اس رات میں اللہ تعالی اپنے نیک بندوں کو اپنی خصو صی رحمت سے نوازتا ہے۔ اس رات ہر امر کا فصیلہ ہوتا ہے۔ اور اللہ تعالی مخلوق میں رزق تقسیم فرماتا ہے۔ پورے سال ان سے سرزد ہونے والے اعمال اور پیش آنے والے واقعات سے اپنے فرشتوں کو باخبر کرتا ہے۔سیدنا ابوبکر سے روایت ہے۔کہ جناب رسول اللہ ﷺ نے فرمایا :
    اٹھو شعبان کے مہنیے کی پند ھویں رات کو اس لیے کہ بالیقین یہ رات مبارک ہے۔ اللہ تعالی فرماتا ہے۔ کہ اس رات کو کوئی ایسا ہے جو بخشش چاہتا ہو مجھ سے تا میں بخش دوں اور مدد مانگے مدد دوں اور ہے کوئی محتاج کہ اسودہ حالی چاہتا ہو اس کو میں اسودہ کر دوں چنا نچہ صبح تک یہی ارشاد ہو تا ہے ۔
    یہ تہوار بہت اہم ہے۔ یہ ہما را مذ ہبی تہوار ہے۔اس کو ہم ہی نہیں پو ری دنیا اہتمام سے مناتے ہیں ۔یہ سب سے بڑی عید ہو تی ہے ۔ اس عید پر میٹھے پر ختم کہا جاتا ہے۔اس رات اپنے چھتوں پر موم بتیوں سے چراغاں کیا جاتا ہے ۔اس دن ہمارے گاؕؤں میں تمام لوگ پیسے اکھٹے کر کے دیگیں پکا کر غریبوں میں تقسیم کرتے ہیں ۔ اور سب سے دعائیں لیتے ہیں ۔ پندرھویں شب جو شب برات کے نام سے موسوم و مشہور ہے ۔ اس رات حضرت امیر المومین علیہ السلام سے منقول ہے۔کہ جناب رسول اللہﷺ نے ارشاد فر ما یا؛
    کہ شعبان کی پند رھویں رات عبا دت میں بسر کر و۔ اور دن میں رو زہ رکھو ۔ یقیناً اول شب سے آخر شب تک خدا کی جا نب سے یہ ندا کی جا تی ہے ۔ کہ آیا کو ئی استغفاکرنے والا ہے ۔ تا کہ اپنے گنا ہو ں کی بخشش طلب کرئے تا کہ میں ان کے گنا ہ بخشوں ۔ آیا کو ئی ایسا ہے کہ روزی طلب کر اور میں اس کی روزی زیادہ کر دوں یہ بخششش کی رات ہے ۔ اس رات ہم کو بخشش کی دعا ما نگنی چاہیے۔ اللہ تعالی سب کی دعائیں قبو ل فرما ئے اور سب کو بخش دے۔ آمین
     
  2. IQBAL HASSAN
    Offline

    IQBAL HASSAN Designer
    • 83/98

    View attachment 555
    سبق ملا ہے یہ معراج مصطفے سے مجھے
    کہ عالم بشریت کی زد میں ہے گردوں ​
    View attachment 555
    تیری معراج کہ تو لوح وقلم تک پہنچا
    میری معراج کہ میں تیرے قدم تک پہنچا
    View attachment 555
    پاک اس مبارک رات اور اپنے پیارے حبیب صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کے صدقے ہم سب کی مشکلات آسان فرمائے، صراط مستقیم پر چلنے کی توفیق عطا فرمائے اور ہمیں دین و دنیا کی تمام نعمتیں عطا فرمائے، بے روز گاروں کو حلال روزگار اور روزگار والوں کو رزقِ حلال عطا فرمائے اور سب کی روزی رزق میں برکت عطا فرمائے، بے اولادوں کو نیک صالح اولاد اور اولاد والوں کی اولاد کو فرمانبردار بنائے، قرض والوں کے قرض، مرض والوں کے مرض اور درد والوں کے درد دور فرمائے، ہمارے ملکِ پاکستان کو اندرونی و بیرونی خطرات سے محفوظ فرمائے اور امن کا گہوارہ بنائے،پوری دنیا میں اسلام کا بول بالا اور دشمنانِ اسلام کا منہ کالا فرمائے، امتِ مسلمہ میں اتحاد و اتفاق قائم فرمائے اور جہاں کہیں مسلمانوں پر ظلم ہورہا ہے انہیں اس ظلم سے نجات عطا فرمائے اللہ پاک پوری امتِ مسلمہ کی بخشش فرمائے، اور ہماری تمام نیک جائز حاجات پوری فرمائے، آمین
    آج کی اس مبارک رات میں اپنی دعائوں میں یاد رکھیے گا۔ جزاک اللہ
    View attachment 555
     
  3. sahil_jaan
    Offline

    sahil_jaan Guest

    بہت ہی اعلی آرٹیکل بنایا ہے بہت عمدہ شئیرنگ ہے معراج النبی ﷺ کے حوالے سے
     
  4. PRINCE SHAAN
    Offline

    PRINCE SHAAN Guest

Share This Page