احمد مشتاق:کہیں امید سی ہے دل کے نہاں خانے میں

Discussion in 'Famous Urdu Poets' started by IronMan, Nov 8, 2016.

  1. السلام علیکم
    آئی ٹی استاد ڈاٹ کام وزٹ کرنے کا شکریہ۔ ہم آپکو خوش آمدید کہتے ہیں۔ فورم کے کسی بھی حصے کو استعمال میں لانے جیسے پوسٹنگ کرنے، کوئی تھریڈ دیکھنے یا لکھنے کسی بھی ممبر سے رابطہ کرنے کے لئے اور فورم کے دیگر آلات وغیرہ کا استعمال کرنے کے لئے آپکا رجسٹر ہونا ضروری ہے۔ رجسٹر ہونے کے لئے یہاں کلک کریں۔ رجسٹریشن حاصل کرنا بالکل آسان اور بالکل مفت ہے۔
  2. آئی ٹی استاد کے لیے ٹیم ممبرز کی ضرورت ہے خواہش مند ممبرز ایڈمن سے رابطہ کریں
    Dismiss Notice
  1. IronMan
    Offline

    IronMan My Name is Zain Khan from Islambad Staff Member
    • 28/33

    کہیں امید سی ہے دل کے نہاں خانے میں
    ابھی کچھ وقت لگے گا اسے سمجھانے میں
    موسمِ گل ہو کہ پت چھڑ ہو بلا سے اپنی
    ہم کہ شامل ہیں نہ کھلنے میں نہ مرجھانے میں
    ہم سے مخفی نہیں کچھ راہگزرِ شوق کا حال
    ہم نے اک عمر گزاری ہے ہوا خانے میں
    ہے یوں ہی گھومتے رہنے کا مزا ہی کچھ اور
    ایسی لذّت نہ پہنچنے میں نہ رہ جانے میں
    نئے دیوانوں کو دیکھیں تو خوشی ہوتی ہے
    ہم بھی ایسی ہی تھے جب آئے تھے ویرانے میں
    موسم کا کوئی محرم ہو تو اس سے پوچھو
    کتنے پت جھڑ ابھی باقی ہیں بہار آنے میں​
     
    AllRounder likes this.
  2. AllRounder
    Online

    AllRounder Guest

    Nice sharing
     
  3. Rashidkareem
    Offline

    Rashidkareem Newbi
    • 18/33

    Good Post Thanks
     
  4. IQBAL HASSAN
    Online

    IQBAL HASSAN Designer
    • 63/65


    ہم سے مخفی نہیں کچھ راہگزرِ شوق کا حال
    ہم نے اک عمر گزاری ہے ہوا خانے میں

    .......................................................
    buhot hi shandar poets hain
    ap ka shukria janab
     
    AllRounder likes this.

Share This Page