1. السلام علیکم
    آئی ٹی استاد ڈاٹ کام وزٹ کرنے کا شکریہ۔ ہم آپکو خوش آمدید کہتے ہیں۔ فورم کے کسی بھی حصے کو استعمال میں لانے جیسے پوسٹنگ کرنے، کوئی تھریڈ دیکھنے یا لکھنے کسی بھی ممبر سے رابطہ کرنے کے لئے اور فورم کے دیگر آلات وغیرہ کا استعمال کرنے کے لئے آپکا رجسٹر ہونا ضروری ہے۔ رجسٹر ہونے کے لئے یہاں کلک کریں۔ رجسٹریشن حاصل کرنا بالکل آسان اور بالکل مفت ہے۔

فیس بکیوں کی دھمالیں

Discussion in 'Baat Cheet' started by PakArt, Aug 27, 2017.

  1. PakArt

    PakArt May Allah bless all Martyre of Pakistan

    فیس بکیوں کی دھمالیں

    ہمارے ہاں ”جگاڑ ٹیکنالوجی“ اتنے عروج پر ہے کہ ہم نے فیس بک سے بھی کئی جگاڑ لگا لئے ہیں۔ فیس بک انٹرنیٹ پر حلقہ احباب بنانے اور ایک دوسرے کو اپنے بارے میں آگاہ رکھنے کے لئے بنی تھی، مگر ہم اس سے وہ وہ کام لے رہے ہیں کہ مجھے لگتا ہے مستقبل میں شادیوں کی تقریبات بھی فیس بک پر ہی ہوا کریں گی۔

    خیر چلیں آپ کو فیس بک اور اس کے بکیوں کے بارے میں کچھ بتاتے ہیں۔

    سب سے پہلے ملئے فیس بکی مفتی اعظم سے۔
    فیس بکی مفتی اعظم کے سائے میں کئی ایک چھوٹے چھوٹے ”بکی مولبی“ کام کرتے ہیں۔ یہ سب ”من ترا حاجی بگوئم تو مرا حاجی بگو“ کے مصداق چلتے ہیں۔ ہر کسی نے اپنی ڈیڑھ اینٹ کی مسجد بنا رکھی ہے اور کفر کے فتوے ان کے ہاں تھوک پر دستیاب ہیں۔ بس کبھی غلطی سے بھی ان کے خلاف کچھ نہ کہیے گا، نہیں تو آپ کا ایمان ایسا بُک کریں گے کہ خود ایمان کو خبر نہ ہو گی اور آپ فیس بک تو کیا اپنا فیس دیکھ کر بھی ڈریں گے۔ ان کا سب سے مؤثر ہتھیار بغیر حوالے کے کوئی بھی بات اس انداز میں تیار کرنا ہوتی ہے جس سے یہ لوگوں کے جذبات آسانی سے قابو کر سکیں اور پھر جذباتی لوگ اپنا ایمان تازہ کرتے ہوئے بغیر سوچے سمجھے دے شیئر پر شیئر اور لائیک پر لائیک۔ باتیں ایسی کہ جن کا کوئی سر پیر نہیں ہوتا۔اگر آپ انہیں سمجھانے کی خاطر یا ان سے بحث برائے تعمیر کرنا چاہو تو چونکہ ان کے پاس کوئی حوالہ نہیں ہوتا لہٰذا ذاتیات پر اترتے ہوئے ایسی گالیاں دیں گے کہ آپ کے چودہ طبق روشن ہو جائیں گے۔ ان کی باتوں میں اتنا وزن ہے کہ چھوٹی سے بڑی ہر بات پر شیطان انہیں روکتا ہے اور یہی چیز ان کی پہچان ہے کہ جب کوئی چیز شیئر کرتے ہیں تو ساتھ لکھتے ہیں کہ ”جب آپ اسے شیئر کرنے لگے گے تو شیطان آپ کو روکے گا“۔ اگر آپ ان سے حقیقی زندگی میں ملیں تو حیرانی یہ ہو گی کہ ان کا اسلام سے اتنا ہی واسطہ ہے جتنا آج کل ایک عام مسلمان کا ہے مگر فیس بک پر یہ بکی مفتی اور بکی مجاہد اعظم کے نام سے مشہور ہوئے بیٹھے ہیں۔

    یہاں ایک بات واضح کر دوں کہ فیس بکی ”مولبیوں“ کے علاوہ اصلی والے مولوی اور مفتی یعنی اچھے لوگ بھی فیس بک پر موجود ہیں، جو اصل معنوں میں اسلام کے لئے کام کر رہے ہیں اور کسی دوسرے کو بدنام کرنے کی بجائے اسلام کی تبلیغ کرتے ہیں۔ ان کی ہر بات کے ساتھ حوالہ ہوتا ہے۔ یہ لوگ نہایت ہی اعلیٰ ظرف کے مالک ہیں اور ان کی بات میں اتنا وزن ہوتا ہے کہ شیطان انہیں نہیں روک پاتا۔

    فیس بکی ٹیگئے
    یہ فیس بک کی سب سے خطرناک اور ڈھیٹ جنس ہے۔ ہر چیز میں آپ کو راہ چلتے گھسیڑ لے گی۔ چیز چاہے کسی کی بھی ہو یا کسی بھی شعبہ سے تعلق رکھتی ہو، چاہے آپ کا اس چیز سے کوئی تعلق بنتا ہو یا نہیں، مگر ان کا کام ہے کہ ہر چیز میں آپ کو ٹیگ کرنا۔ دیکھو جی اگر کوئی چیز ہمارے بارے میں یا ہمارے شوق کے بارے میں ہے تو پھر ہمیں ضرور ٹیگ کرو مگر اپنے ہمسائیوں سے پوچھ رہے ہو کہ لسی ہے یا نہیں تو بھلا اس میں ہمیں ٹیگ کر کے ذلیل کرنے کی کیا ضرورت ہے؟

    فیس بکی شیئرئے، لائیکئے اور کمنٹئے
    ایک اندازے کے مطابق ان حضرات کا کام روزانہ کی بنیاد پر ہر صورت میں چالیس پچاس شیئر، دو چار سو لائیک اور بیس پچیس کمنٹ کرنا ہوتا ہے۔ ان کی حرکات میں سب سے زیادہ پایا جانے والا لفظ Awesome ہے۔ یہ مواد کو ترجیح نہیں دیتے بلکہ بھیڑ چال کا حصہ بنتے ہوئے اپنا حصہ ڈالتے ہیں۔ انہوں نے ہر اوٹ پٹانگ چیز کو شیئر وغیرہ کر کے اپنا ہدف پورا کرنا ہوتا ہے۔

    فیس بکی ٹائیلٹی کڑیاں
    یہ کڑیاں ایک عظیم مشن لے کر فیس بک پر آتی ہیں۔ جہاں ان کے دیگر کئی اہم مقاصد ہیں وہی پر ان کا ایک مقصد اپنے غسل خانے، اس میں لگے شیشے اور اپنے موبائل کی مارکیٹنگ ہوتی ہے۔ تقریباً روزانہ غسل خانے میں شیشے کے سامنے کھڑی ہو کر موبائل سے ایک عدد تصویر بناتی ہیں، پھر بکیوں کو لٹاتی اور بکیوں کو دلی تسکین پہنچاتی ہیں۔ سب سے زیادہ لائیک اور
    کمنٹ انہیں ہی ملتے ہیں۔

    Hello guest, Thank you for Register or you log to see the links!

     
    IQBAL HASSAN and Admin like this.
  2. IQBAL HASSAN

    IQBAL HASSAN Management

    السلام علیکم زاہد صاحب
    بہت ھی خوبصورت تھریڈ اپ نے بنایا ھے
    اور پوری تفصیل سے اگاہ کیا ھے
    اپکا بے حد ممنون ھوں ۔۔۔ شکریہ
     
    PakArt likes this.

Share This Page